1. This site uses cookies. By continuing to use this site, you are agreeing to our use of cookies. Learn More.
  2. آپس میں قطع رحمی نہ کرو، یقینا" اللہ تمہارا نگہبان ہے۔یتیموں کا مال لوٹاؤ، اُن کے اچھے مال کو بُرے مال سے تبدیل نہ کرو ۔( القرآن)

  3. شرک کے بعد سب سے بڑا جرم والدین سے سرکشی ہے۔( رسول اللہ ﷺ)

  4. اگر تم نے ہر حال میں خوش رہنے کا فن سیکھ لیا ہے تو یقین کرو کہ تم نے زندگی کا سب سے بڑا فن سیکھ لیا ہے۔(خلیل جبران)

کب مجھے سوچنے کی فرصت ہے

'میری شاعری' میں موضوعات آغاز کردہ از سیدعلی رضوی, ‏اپریل 2, 2019۔

  1. سیدعلی رضوی

    سیدعلی رضوی یونہی ہمسفر

    کب مجھے سوچنے کی فرصت ہے
    یہ الگ بات ہے،اجازت ہے!

    تجھ سوا سوچ کچھ نہیں سکتا
    اور مجھے سوچنے کی عادت ہے

    عادتا اب بھی سوچتا ہوں ترا
    کب کہا ہے مجھے محبت ہے

    تو جو دریا ہے تجھ کو کیا معلوم
    پیا س میں میری کتنی شدت ہے

    یہ اداسی بنی ہے میرے لیے
    یہ اداسی مری ضرورت ہے

    کیسے جاۓ گی میرے پہلو سے
    سن! اداسی کی آج شامت ہے

    کام میرے سبھی ضروری ہیں
    اور درپیش مجھ کو عجلت ہے

    خوف کھاتا ہے مجھ سے بے چارہ
    یعنی وحشت کو مجھ سے وحشت ہے

    ابو لویز اعلی
     

اس صفحے کو مشتہر کریں